ذیابیطس : diabetes in Urdu

کیا ذیابیطس میں کشمش کھائی جا سکتی ہے؟ ماہرین سے جانیے اسے کھانے کے فوائد اور صحیح طریقہ

ذیابیطس کے مریض اکثر کشمش کھانے سے گریز کرتے ہیں لیکن کیا یہ واقعی اتنا نقصان دہ ہے؟ آئیے ماہرین سے کشمش کے فوائد جانتے ہیں۔

ذیابیطس کے مریضوں کو کچھ بھی کھانے سے پہلے سو بار سوچنا پڑتا ہے۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ بغیر سوچے سمجھے کچھ بھی کھانا. ذیابیطس میں شوگر بڑھانے کا کام کرتا ہے۔ ایسی صورت حال میں ذیابیطس کے مریضوں کو ان چیزوں کا انتخاب کرنا ہوتا ہے. جن میں شوگر کی مقدار کم ہو اور جن میں گلیسیمک انڈیکس کم ہو۔ اس کے علاوہ ذیابیطس میں ہر چیز کھانے کا وقت بھی بہت اہمیت رکھتا ہے. کیونکہ آپ کیا اور کب کھاتے ہیں اس سے آپ کی شوگر بھی متاثر ہوتی ہے۔ لیکن ایسی بہت سی غذائی اشیاء ہیں، جن کے بارے میں ذیابیطس کے مریضوں کے ذہن میں یہ سوال پیدا ہوتا ہے کہ کیا اسے کھانا چاہیے یا نہیں؟ ایسی ہی ایک چیز کشمش ہے جس کا ذائقہ میٹھا ہوتا ہے اور شوگر کے مریض یہ سوچ کر نہیں کھاتے کہ اس سے آپ کی شوگر بڑھ سکتی ہے۔ لیکن کیا ذیابیطس میں واقعی کشمش کھا سکتے ہیں؟

are raisins good for diabetics know from in urdu

کیا ذیابیطس کے مریض کشمش کھا سکتے ہیں.(Are raisins good for diabetics)

جیوتی بھٹ، سینئر ڈائیٹیشن کا کہنا ہے کہ ذیابیطس کے شکار افراد کیا کھا سکتے ہیں اور کیا نہیں کھا سکتے اس بارے میں بہت سی غلط فہمیاں پائی جاتی ہیں۔ کشمش ایک درمیانے درجے کی GI خوراک ہے، لیکن ان میں موجود چینی کی مقدار ذیابیطس کے مریضوں میں شوگر کی سطح کو بڑھا سکتی ہے۔ کشمش میں فریکٹوز 30% اور گلوکوز کل غذائی اجزاء کا 28% ہے۔ ساتھ ہی ایک کپ کشمش کی بات کریں تو اس میں 115 گرام کاربوہائیڈریٹس ہوتے ہیں جو کہ توانائی کا بہت بڑا ذریعہ ہے۔ اسی لیے ہم عام طور پر ذیابیطس کے مریضوں کو کشمش کھانے کا مشورہ نہیں دیتے۔

یہ بھی پڑھیں: ذیابیطس کے مریضوں کو نان چکن کھانا چاہیے یا نہیں؟

ذیابیطس کے لیے کشمش.(raisins for diabetes)

اسی کے ساتھ لکھنؤ ڈائیٹ کلینک کے ڈائیٹشین اشونی کمار کا کہنا ہے کہ کشمش غذائی ریشہ سے بھرپور ہوتی ہے جو آپ کے بلڈ شوگر لیول کو کنٹرول کرنے میں بھی مددگار ثابت ہوتی ہے، خاص طور پر اگر آپ کو قبض کا مسئلہ ہے۔ اس کا زیادہ فائبر قبض کو دور کرتا ہے اور آپ کو زیادہ دیر تک پیٹ بھرنے کا احساس دلاتا ہے اور اس بات کو یقینی بناتا ہے کہ آپ ناشتے سے پرہیز کریں۔ یہ آپ کے کھانے کے بعد گلیسیمک کنٹرول کو کنٹرول کرنے میں بھی مدد کرتا ہے۔ لیکن اس بات کا خیال رکھیں کہ آپ نے اسے صحیح طریقے سے اور صحیح مقدار میں کھانا ہے۔ بصورت دیگر، اس کا براہ راست استعمال بلڈ شوگر کو بڑھا سکتا ہے۔

کشمش کھانے کے طریقے.(ways to eat raisins)

کشمش بھی سادہ کھانے میں اچھی ہوتی ہے۔ لیکن اگر آپ انہیں اپنے کھانے یا اسنیکس میں شامل کرنا چاہتے ہیں تو آپ انہیں ان طریقوں سے کھا سکتے ہیں۔ کے طور پر اگر

ترکاریاں.(salad)

کشمش آپ کے سلاد میں مٹھاس کا اضافہ کرتی ہے۔ انہیں پتوں والی سبزیاں، کرنچی گری دار میوے کے ساتھ ملائیں اور اپنی پسند کی کسی بھی سبزی میں شامل کریں۔

دلیہ میں.(in porridge)

دلیا کے ایک پیالے میں مٹھی بھر کشمش ملا کر کھائیں۔

کشمش کب کھائیں. (Eat soaked raisins in the morning)

آپ دن کے کسی بھی وقت کشمش کھا سکتے ہیں۔ لیکن اسے کچھ خاص طریقے سے کھانے کے اور بھی فائدے ہیں۔

  • صبح نہار منہ بھیگی ہوئی کشمش کھائیں۔
  • انہیں دوپہر کے کھانے سے پہلے اپنے مڈ ڈے ناشتے کے طور پر کھائیں۔

یہ بھی پڑھیں: کیا شوگر کے مریض سونے سے پہلے دودھ پی سکتے ہیں؟ جانئے ماہرین کیا کہتے ہیں۔

are raisins good for diabetics know from in urdu

کشمش کا فائبر دل کی بیماری کا خطرہ کم کرتا ہے۔ اسی طرح اس کے فائبر کے استعمال سے فالج، بلڈ پریشر اور کولیسٹرول کا خطرہ کم کیا جا سکتا ہے۔ درحقیقت کشمش میں بلڈ پریشر کو کم کرنے کی صلاحیت بھی ہوتی ہے۔ کشمش کو ناشتے کے طور پر استعمال کرنا ٹائپ 2 ذیابیطس کے مریضوں اور قلبی امراض کے دیگر خطرات میں مبتلا افراد میں بہت فائدہ مند ہے۔ اس کے علاوہ شوگر کے مریض قبض دور کرنے کے لیے کشمش کو کئی طریقوں سے کھا سکتے ہیں۔ کیونکہ وہ اس کا پانی پی سکتے ہیں جس سے پیٹ صاف ہوتا ہے۔ اس کے علاوہ یہ بات بھی قابل غور ہے کہ جو لوگ ذیابیطس کو ٹھیک طریقے سے کنٹرول نہیں کر پاتے، ان کے لیے زیادہ مقدار میں کشمش کھانا فائدہ مند نہیں ہے۔

 

Aarif Rao

Arif Rao is a Herbalist, Blogger, Writer, YouTuber, and Digital Content Creator who is helping people by solving their problems and making them physically stable.

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button