خواتین کی صحت

حمل کے دوران پیٹ اور ٹانگوں پر خارش کیوں ہوتی ہے؟ اسباب اور 5 گھریلو علاج جانیں۔

حمل کے دوران، ایک عورت کو جلد پر خارش ہو سکتی ہے جسے پلاک آف حمل کہا جاتا ہے۔ اس میں بہت خارش ہوتی ہے اور بہت بے چینی محسوس ہوتی ہے۔

حاملہ خواتین کو حمل کے دوران بعض اوقات پیٹ اور ٹانگوں پر چھوٹے سرخ دھبے نظر آتے ہیں۔ جو کہ Hive جیسی صورت حال سے ملتی جلتی نظر آتی ہے۔  جس کی وجہ سے بہت خارش بھی محسوس ہوتی ہے۔  یہ جلد پر ایک خارش ہے جس میں بہت زیادہ خارش ہوتی ہے۔ اس سے حاملہ کو تکلیف ہو سکتی ہے۔ اس قسم کے دانے 150 سے تین سو حمل میں ایک عورت کو متاثر کر سکتے ہیں۔ تاہم، یہ مسئلہ چھٹے مہینے میں دیکھا جا سکتا ہے. خاص طور پر اگر رحم میں ایک سے زیادہ بچے ہوں یا یہ عورت کا پہلا حمل ہو۔ اس کی وجہ سے خارش ایک ہفتے تک رہ سکتی ہے۔ لیکن ددورا وقتا فوقتا دوبارہ ہو سکتا ہے۔ ویسے یہ حالت بچے یا ماں کے لیے زیادہ نقصان دہ نہیں ہے۔ لیکن اچھی بات یہ ہے کہ اس مسئلے کا علاج بھی کیا جا سکتا ہے۔ آپ گھریلو علاج کی مدد سے آرام حاصل کر سکتے ہیں۔

causes for pupp rashes during pregnancy in urdu

اسے درج ذیل ناموں سے بھی جانا جاتا ہے۔(It is also known by the following names)

  • نرس دیر سے شروع ہونے والی پریریگو
  • حمل کے زہریلا arrhythmias
  • حمل کے زہریلے دانے
  • حمل کے زہریلے دانے پیدا ہوئے۔

گھریلو علاج جو آپ کو سکون فراہم کریں گے۔(home remedies that will give you relief)

1. دلیا کا غسل:(Oatmeal Bath)

دلیا میں سوزش کی خصوصیات ہوتی ہیں جو خارش اور سوجن کو کم کرنے میں مدد کرتی ہیں۔ اس لیے یہ علاج فائدہ مند ہے۔

کس طرح کرنا ہے

  • پہلے اپنے ٹب کو پانی سے بھریں۔
  • اب اس میں ایک سے دو کپ دلیا ڈالیں۔
  • اب 20 سے 30 منٹ تک انتظار کریں کہ جئی پانی میں گھل جائے۔
  • اس کے بعد گس کے پانی سے غسل کریں۔
  • اس طرح آپ ہفتے میں دو سے تین بار نہا سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: حمل میں مسوڑھوں سے خون آنے کی یہ 5 وجوہات ہو سکتی ہیں، علامات اور احتیاط جانیں ڈاکٹر سے

2. پیپرمنٹ:(Peppermint)

اس کی سوزش کی خصوصیات خارش کو کم کرنے میں مدد کرتی ہیں۔

کس طرح کرنا ہے

  • سب سے پہلے دو سے تین چمچ پیپرمنٹ آئل لیں اور اس میں آدھا چائے کا چمچ ناریل کا تیل ملائیں۔
  • دونوں چیزوں کو اچھی طرح مکس کریں اور اس مکسچر کو متاثرہ جگہ پر لگائیں۔
  • اسے 20 سے 30 منٹ تک لگا رہنے دیں اور پھر دھو لیں۔
  • آپ اسے روزانہ بھی استعمال کر سکتے ہیں۔

3. لونگ کا تیل:(Clove Oil)

کس طرح کرنا ہے

لونگ کے تیل کے دو سے تین قطرے لیں اور آدھا چائے کا چمچ ناریل کا تیل ملا دیں۔
دونوں تیلوں کو اچھی طرح مکس کریں اور متاثرہ جگہ پر لگائیں۔
اسے متاثرہ جگہ پر 20 سے 30 منٹ تک لگا رہنے دیں اور پھر دھو لیں۔
اب اسے دھو لیں۔ اسے روزانہ ایک یا دو بار لگائیں۔
یہ آپ کی خارش کو کم کرتا ہے اور خارش کی علامات کو بھی کم کرتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: حمل کے دوران بیٹھنے کا صحیح طریقہ کیا ہونا چاہیے؟ جانیے ماہرین سے

https://healthcareurduweb.com/how-to-sit-during-pregnancy-in-urdu/

4. کولڈ کمپریس.(Cold Compress)

کس طرح کرنا ہے

  • متاثرہ جگہ پر کولڈ کمپریس لگائیں۔
  • اسے 5 سے 10 منٹ تک اسی طرح چھوڑ دیں۔
  • اب اسے ہٹا دیں اور اگر ضرورت ہو تو کچھ دیر بعد دوبارہ لگائیں۔
  • اسے روزانہ ایک یا دو بار استعمال کریں۔
  • کمپریس خارش اور خارش کو بھی کم کرتا ہے۔

5. ڈینڈیلین جڑ:(Dandelion Root)

  • ایک کپ پانی میں دو سے تین چمچ ڈینڈیلین جڑ والی چائے ملا لیں۔
  • اسے ایک برتن میں ڈالیں اور ابالنے دیں۔
  • اب اسے 5 سے 10 منٹ تک ٹھنڈا ہونے دیں اور چھان لیں۔
  • اب اس پانی میں روئی ڈال کر نچوڑ لیں۔ اب اسے متاثرہ جگہ پر لگائیں اور آدھے گھنٹے کے لیے چھوڑ دیں۔
  • اس کے بعد پانی کی مدد سے دھو لیں۔
  • اسے روزانہ ایک یا دو بار استعمال کریں۔

اگر گھریلو علاج سے آپ کو کوئی سکون نہیں ملتا تو آپ کسی کریم یا دوا کے لیے ڈاکٹر سے رجوع کر سکتے ہیں۔ کافی مقدار میں پانی پئیں اور زیادہ بڑھنے سے بچنے کے لیے خارش پر زیادہ خارش نہ کریں۔ زیادہ گرم پانی سے نہ نہائیں۔

 

 

Aarif Rao

Arif Rao is a Herbalist, Blogger, Writer, YouTuber, and Digital Content Creator who is helping people by solving their problems and making them physically stable.

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button
AllEscort