صحت مند غذا

گرمیوں میں گرمی کی لہر کے دوران یہ 4 مشروبات نہ پئیں، یہ صحت کو نقصان پہنچا سکتے ہیں۔

گرمی کی لہر سے بچنے کے لیے مشروبات انگریزی: گرمیوں میں گرمی کی لہر سے بچنے کے لیے صرف گھر میں رہنا ہی کافی نہیں ہے، کچھ مشروبات کا استعمال بند کرنے کی ضرورت ہے۔

گرمی کے موسم میں صحت کے بہت سے خطرات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ موسم کا درجہ حرارت بڑھنے سے صحت کے کئی مسائل بھی جنم لیتے ہیں۔ آج کل موسم کا درجہ حرارت بہت بڑھ گیا ہے اور اب گرمی کی لہر شروع ہو گئی ہے۔ گرمیوں میں جب گرمی شروع ہوتی ہے تو لوگ گھر سے باہر نکلنا چھوڑ دیتے ہیں کیونکہ یہ گرم ہوائیں صحت کو بہت نقصان پہنچاتی ہیں۔ یہ گرم ہوائیں بخار، جلد پر خارش، چکر آنا، سر درد، متلی، گھبراہٹ، بہت زیادہ پسینہ آنا اور بے ہوشی جیسے مسائل کا سبب بن سکتی ہیں، کیونکہ آپ کے جسم میں گرمی کی وجہ سے پانی کی کمی ہوتی ہے۔ اس لیے ان سے بچنا بہت ضروری ہے۔ لیکن کیا گرمی کی لہر سے بچنے کے لیے گھر میں قید رہنا کافی ہے؟

 گھر پر رہنے سے ہیٹ اسٹروک کے اثر کو کم نہیں کیا جا سکتا. کیونکہ ہم میں سے اکثر گرمیوں میں گھر میں قیام کے دوران ایسی بہت سی چیزیں کھاتے ہیں. جو جسم کو پانی کی کمی کا باعث بنتی ہیں۔ یوں تو بہت سے ایسے مشروبات ہیں. جو آپ کو تھوڑے وقت کے لیے سردی کا احساس دلاتے ہیں. لیکن ان کے ڈائیوریٹک اثر کی وجہ سے آپ پانی کی کمی کا شکار ہو سکتے ہیں۔ اس آرٹیکل میں، ہم آپ کو ایسے 5 مشروبات کے بارے میں بتا رہے ہیں (گرمیوں میں گرمی کی لہر سے بچنے کے لیے مشروبات) جنہیں آپ کو ہیٹ اسٹروک کے دوران پینے سے گریز کرنا چاہیے۔

drinks to avoid heatwave in summer in Urdu

گرمی کے دوران یہ 4 مشروبات مت پیئے.(Drinks To Avoid In Heat Wave In Summer )

1. چائے اور کافی.(Tea and Coffee)

ماہر غذائیت گریما کے مطابق گرمیوں کے موسم میں اکثر دیکھا گیا ہے کہ لوگ آئس ٹی اور کولڈ کافی کا بہت زیادہ استعمال کرتے ہیں۔ کیونکہ یہ آپ کو ٹھنڈک محسوس کرنے میں مدد کرتا ہے اور آپ کو تروتازہ محسوس کرتا ہے۔ لیکن ہم میں سے اکثر نہیں جانتے کہ ان میں موتروردک خصوصیات ہیں، جو آپ کے جسم سے قدرتی طور پر پانی نکالنے کا کام کرتی ہیں۔ ان کا زیادہ استعمال کرنے سے آپ بار بار ٹوائلٹ جاتے ہیں. جس کی وجہ سے جسم میں پانی کی کمی ہوجاتی ہے. اور آپ پانی کی کمی کا شکار ہوجاتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:  کافی پینے سے پہلے یہ 5 چیزیں کبھی نہ کھائیں، یہ مرکبات صحت کے لیے نقصان دہ ہیں۔

2. پھلوں کے جوس، خاص طور پر پیک شدہ.(Fruit juices, especially packaged ones)

اگرچہ پھلوں کے جوس صحت بخش ہوتے ہیں. لیکن اگر آپ ان کا زیادہ استعمال کرتے ہیں. تو یہ جسم میں پانی کی کمی کا باعث بھی بن سکتے ہیں۔ کیونکہ جب پھلوں کا جوس نکالا جاتا ہے تو پھلوں کا گودا ان میں سے فائبر اور فائبر مواد کے ساتھ نکال دیا جاتا ہے۔ ان میں موجود تمام غذائی اجزاء ختم ہو جاتے ہیں اور صرف پھلوں کا رس باقی رہ جاتا ہے جس میں بہت زیادہ چینی ہوتی ہے۔ اس کے ساتھ پیک کیے ہوئے جوسز میں بہت زیادہ شوگر موجود ہوتی ہے، جب آپ ان کا زیادہ استعمال کرتے ہیں. تو اس کا ڈائیورٹک اثر بھی ہوتا ہے اور آپ کو بار بار ٹوائلٹ جانا پڑتا ہے۔ اس کے بجائے آپ سبزیوں کا رس پی سکتے ہیں۔

3. کولا، سوڈاس اور دیگر کاربونیٹیڈ مشروبات.(Colas, Sodas and Other Carbonated Drinks)

ان دنوں بچے بہت زیادہ سوڈا، کولا، انرجی ڈرنکس جیسے ریڈبل اور دیگر کاربونیٹیڈ مشروبات کھاتے ہیں۔ ماہر غذائیت گریما کے مطابق یہ مشروبات آپ کو تھوڑی دیر کے لیے سردی کا احساس دلاتے ہیں لیکن ان میں چینی کی مقدار بہت زیادہ ہوتی ہے۔ کولا کی ایک چھوٹی بوتل میں تقریباً 7 چائے کے چمچ چینی ہوتی ہے۔ خاص طور پر، زیادہ تر انرجی ڈرنکس صرف کیفین اور شوگر پر مبنی ہوتے ہیں، جن میں موتروردک اثرات ہوتے ہیں۔ اس کے ساتھ یہ صحت کے بہت سے مسائل جیسے ذیابیطس، دل کی بیماری اور خراب دانتوں کو بھی جنم دے سکتا ہے۔ یہی نہیں جسم میں پانی کی کمی کے ساتھ یہ پریشانی جیسے مسائل بھی پیدا کر سکتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  خشک انگور اور شہد کھانے سے صحت کو یہ 5 فائدے ملتے ہیں، ماہرین سے استعمال کرنے کا طریقہ جانیں۔

drinks to avoid heatwave in summer in Urdu

4. شراب.(Alcohol)

کچھ لوگ بہت زیادہ ٹھنڈی بیئر اور شراب بھی کھاتے ہیں۔ لیکن جب آپ اس کا زیادہ استعمال کرتے ہیں، تو آپ کو اس کے موتروردک اثرات کی وجہ سے زیادہ کثرت سے بیت الخلا جانا پڑتا ہے۔ اس کے علاوہ یہ وزن بڑھانے میں بھی معاون ہے۔

گرمیوں میں ہیٹ اسٹروک سے بچنے کے لیے ہائیڈریٹ رہنا ضروری ہے۔ اس لیے ان نقصان دہ مشروبات کو پینے کے بجائے

Aarif Rao

Arif Rao is a Herbalist, Blogger, Writer, YouTuber, and Digital Content Creator who is helping people by solving their problems and making them physically stable.

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button
AllEscortAllEscort