جلد کی حفاظت.

چہرے پر بار بار بلیچ کرنے سے جلد کو نقصان پہنچتا ہے، جانیں کتنے دن بلیچ کرنا چاہیے؟

بلیچنگ جلد کو چمکدار بناتی ہے۔ لیکن اس میں موجود کیمیکلز آپ کی جلد کو نقصان پہنچا سکتے ہیں۔ آئیے اس بارے میں جانتے ہیں-

بلیچنگ جلد کو چمکدار بناتی ہے۔ درحقیقت، جب آپ بلیچ کرتے ہیں تو اس سے چہرے پر بالوں کا رنگ بھورا ہو جاتا ہے، جس سے آپ کے چہرے کی رونق بڑھ جاتی ہے۔ ایسی حالت میں بہت سے لوگ فوری چمک حاصل کرنے کے لیے بلیچ کرتے ہیں۔ بلیچنگ آپ کی جلد کو چمکدار بناتی ہے۔ اسی لیے بہت سے لوگ بار بار یا چند دنوں میں بلیچ کرنا پسند کرتے ہیں۔ لیکن کیا آپ جانتے ہیں کہ بار بار بلیچ کرنا آپ کے چہرے کو نقصان پہنچا سکتا ہے۔ جی ہاں، اگر آپ چند دنوں میں بار بار بلیچ کرتے ہیں، تو یہ آپ کے چہرے پر کئی مسائل پیدا کر سکتا ہے۔

face bleach side effects in urdu

چہرے پر بلیچ کے مضر اثرات. ( Bleach side effects on face )

مختلف بیماریوں کا خطرہ.(risk of various diseases)

جب بھی آپ پارلر یا گھر میں بلیچ کا پیکٹ لا کر بلیچ کریں تو اس میں موجود اجزاء کے بارے میں ضرور پڑھیں۔ درحقیقت، بلیچ کی کئی اقسام میں مرکری ہوتا ہے، جو آپ کی جلد کو نقصان پہنچا سکتا ہے۔ تحقیق کے مطابق جلد کو ہلکا کرنے والی کریموں میں تقریباً 12 فیصد پارہ ہوتا ہے۔ ایسی حالت میں اگر آپ بلیچ کرتے ہیں تو اگر اس دروازے سے کسی بھی طرح سے آپ کے جسم میں داخل ہوتا ہے تو آپ کو جلد کا بے حسی، ہائی بلڈ پریشر، تھکاوٹ، روشنی کی حساسیت، گردے کا نقصان جیسے کئی مسائل کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ جیسے مسائل

یہ بھی پڑھیں: پانی میں ہلدی ملا کر نہانے سے جلد پر چمک آتی ہے، جلد کے یہ 4 مسائل دور ہو جاتے ہیں۔

جلد کے مسائل کا شکار.(prone to skin problems)

بار بار بلیچ کرنا یا حساس جلد والے افراد کے لیے جلد پر بہت سے مسائل پیدا ہو سکتے ہیں۔ رپورٹ کے مطابق بلیچ میں کچھ ایسے کیمیکلز پائے جاتے ہیں جو جلد پر سوزش کا مسئلہ پیدا کر سکتے ہیں۔ اس کے ساتھ جلد پر بہت سے سنگین اور ہلکے مسائل بھی ہو سکتے ہیں جیسے جلد کا سرخ ہونا، جلد پر چھالے، جلد کے السر، خشک جلد، کھردری جلد، خارش اور جلن وغیرہ (بلیچ آپ کی جلد کو نقصان پہنچا سکتی ہے)۔ صرف میری صحت

nephrotic بیماری.(nephrotic disease)

بلیچ میں مرکری کی وجہ سے نیفروٹک سنڈروم کا خطرہ ہوتا ہے۔ نیفروٹک سنڈروم ایک گردے کی خرابی ہے جو اکثر آپ کے گردوں میں خون کی نالیوں کو نقصان پہنچاتی ہے۔ اس کی وجہ سے جسم میں موجود فضلہ اور اضافی پانی کو نکالنے میں پریشانی ہو سکتی ہے۔ اس مسئلے میں مبتلا شخص کو آنکھوں کے گرد سوجن (ورم)، پیشاب کی جھاگ، بھوک میں کمی اور تھکاوٹ محسوس ہو سکتی ہے۔

بلیچ کتنے دنوں میں کرنا چاہیے.(How many days should bleach be done)

بار بار بلیچ کرنے سے نہ صرف جلد کو نقصان پہنچتا ہے بلکہ یہ آپ کی مجموعی صحت کے لیے بھی نقصان دہ ہو سکتا ہے۔ اس صورت میں بلیچ صرف اس وقت کریں جب آپ کو ضرورت ہو۔ یا، اپنے چہرے کو صرف اس وقت بلیچ کریں جب بالوں کا دورانیہ نظر آئے۔ چہرے کے بالوں کو دوبارہ اگنے میں تقریباً 15 سے 15 دن لگتے ہیں، ایسی حالت میں بلیچ چند دنوں سے بہتر ہے، 3 سے 4 ہفتے بعد ہی کریں۔ یہ آپ کی جلد اور مجموعی صحت کے لیے بہتر ہو سکتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: ایلوویرا سے خارش کا گھریلو علاج، جانیے اس کے استعمال کے 5 طریقے

face bleach side effects in urdu

بلیچنگ سے جلد میں چمک آتی ہے لیکن اس میں موجود کیمیکل آپ کے جسم میں کئی مسائل پیدا کر سکتا ہے۔ اس لیے کثرت سے بلیچ کرنے سے گریز کریں۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button
AllEscort