صحت کا دیسی علاج

پھٹکری کس بیماری میں مفید ہے؟

پھٹکری کا استعمال: پھٹکری بہت سی بیماریوں کا علاج ہے۔ سر، دانت اور انفیکشن کے مسئلہ میں آپ پھٹکری کا استعمال کر سکتے ہیں۔

The use of alum or alum in Urdu for diseases: پھٹکری عام طور پر پانی کے مالیکیولز، ایلومینیم اور سلفیٹ پر مشتمل ہوتی ہے۔ پھٹکری بے بو اور بے رنگ ہوتی ہے۔ اس میں تیزابی اور تیزابی ذائقہ ہوتا ہے۔ پھٹکری عام طور پر سفید اور سرخ رنگوں میں پائی جاتی ہے۔ پھٹکری پانی میں انتہائی حل پذیر ہوتی ہے۔ یہ دواؤں کی خصوصیات سے بھرپور ہے۔ اس میں اینٹی بیکٹیریل، اینٹی موٹاپا، اینٹی سوزش، اینٹی ڈینڈرف خصوصیات ہیں۔ ویسے تو اکثر لوگ شیو کرنے کے بعد پھٹکری کا استعمال کرتے ہیں۔ یہ مونڈنے کی وجہ سے ہونے والے زخموں اور جلنے کو ٹھیک کرنے میں مدد کرتا ہے۔ ساتھ ہی کچھ لوگ پھٹکری کے پانی سے کلی بھی کرتے ہیں۔ لیکن کیا آپ جانتے ہیں کہ پھٹکری کو دیگر کئی مسائل کے علاج میں بھی ایک دوا سمجھا جاتا ہے۔ آئیے جانتے ہیں پھٹکڑی کے کیا فوائد ہیں؟ یا کس بیماری میں پھٹکڑی کا استعمال ہوتا ہے.  پھٹکڑی کس کے لیے استعمال ہوتی ہے؟ اور پھٹکڑی کا استعمال کیسے کریں.

پھٹکری  بیماریوں کے کنٹرول کے لیے استعمال کرتے ہیں۔(Alum or Fitkari Uses for Diseases Control)

دانتوں کے مسائل کو ٹھیک کریں.(fix dental problems)

پھٹکری دانتوں کی بیماری کے علاج میں مددگار ثابت ہوتی ہے۔ اگر آپ کے دانت میں درد، منہ کی خرابی اور گہا کا مسئلہ ہے تو آپ پھٹکری کا استعمال کر سکتے ہیں۔ اس کے لیے آپ نیم گرم پانی میں پھٹکری ملا لیں۔ اب اس پانی سے صبح و شام دھولیں۔ پھٹکری کا پانی ماؤتھ واش کا بھی کام کرتا ہے۔ پھٹکری کے پانی سے دانت کے درد سے نجات مل سکتی ہے۔ اس کے ساتھ منہ کی بدبو دور ہوتی ہے اور گہا سے بھی نجات ملتی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: ابلی ہوئی گندم کھانے سے صحت کو بہت سے فوائد حاصل ہوتے ہیں۔

how-to-use-alum-for-diseases-control-in-Urdu
All Image Source: Freepik.com

بلغم کی پریشانی کو دور کریں.(remove mucus problem)

بہت سے لوگوں کو نزلہ، زکام اور کھانسی کے اکثر مسائل ہوتے ہیں۔ اس کی وجہ سے گلے سے بلغم نکلنا شروع ہو جاتا ہے۔ گلے میں جمع ہونے والا بلغم بہت سی بیماریوں کا سبب بن سکتا ہے۔ اس لیے اسے صاف کرنا بہت ضروری ہے۔

آپ پھٹکڑی (Alum ke Fayde) کا استعمال گلے سے بلغم کو صاف کرنے کے لیے کر سکتے ہیں۔ بلغم دور کرنے کے لیے آپ پھٹکری کو شہد میں ملا کر لے سکتے ہیں۔ اس سے آپ کو بہت فائدہ ہوگا۔

پیشاب کے انفیکشن کا علاج کریں.(treat urine infection)

ہر کسی کو اپنی زندگی کے کسی نہ کسی موڑ پر یورین انفیکشن کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ پھٹکری پیشاب کے انفیکشن کے علاج میں کارگر ثابت ہو سکتی ہے۔ اس کے لیے آپ پھٹکری کا پانی لیں۔ اس سے اپنے پیشاب کی جگہ کو صاف کریں۔ یہ اس علاقے سے بیکٹیریا، وائرس اور جراثیم کو ختم کر دے گا۔ اس کے ساتھ پیشاب کے انفیکشن کے لیے پھٹکری بھی دستیاب ہوگی۔

کھوپڑی کے مسائل کو ٹھیک کریں.(fix scalp problems)

اگر آپ سر کی جلد سے متعلق مسائل سے پریشان ہیں تو اس میں پھٹکری کا استعمال کیا جاسکتا ہے۔ پھٹکری سر کی جوؤں اور گندگی کو دور کرنے میں مدد کر سکتی ہے۔ اس کے لیے آپ پھٹکری کے پانی سے بالوں اور کھوپڑی کو صاف کر سکتے ہیں (بالوں کے لیے Fitkari Uses)۔ پھٹکری کا پانی خشکی، خارش اور جلن کو بھی دور کر سکتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: پان کے پتوں کا کاڑھا(قہوہ) پینے سے یہ 6 زبردست فائدے ملتے ہیں۔

how-to-use-alum-for-diseases-control-in-Urdu
All Image Source: Freepik.com

پھٹکڑی کا استعمال کیسے کریں؟(How to Use Alum for Diseases Control)

  • پھٹکری بہت سے چھوٹے بڑے مسائل کے علاج میں کارآمد ثابت ہوتی ہے۔ آپ اسے پاؤڈر یا پانی کی شکل میں استعمال کر سکتے ہیں۔
  • پھٹکری پانی میں حل ہوتی ہے۔ اس لیے آپ پھٹکری کا پانی پی سکتے ہیں۔
  • اس کے ساتھ بالوں اور جلد کو بھی پھٹکری کے پانی سے صاف کیا جا سکتا ہے۔
  • پھٹکری کے پاؤڈر کو شہد میں ملا کر بھی استعمال کیا جا سکتا ہے۔
  • آپ پھٹکری کا پانی دانتوں پر بھی لگا سکتے ہیں۔

بیماریوں کے لیے پھٹکری کا استعمال: پھٹکری کو صحت کے متعدد مسائل کے علاج کے لیے استعمال کیا جا سکتا ہے۔ پھٹکری بالوں، کھوپڑی، انفیکشن، دانتوں اور دیگر مسائل کو دور کرنے میں کارآمد ثابت ہوتی ہے۔ اس لیے آپ اپنی چھوٹی بڑی پریشانیوں کو دور کرنے کے لیے بھی پھٹکری کا استعمال کر سکتے ہیں۔ لیکن خیال رہے کہ پھٹکری کسی بیماری کا مکمل علاج نہیں ہے۔ کسی بھی مسئلے کی صورت میں ڈاکٹر سے بھی رجوع کرنا چاہیے۔

 

Aarif Rao

Arif Rao is a Herbalist, Blogger, Writer, YouTuber, and Digital Content Creator who is helping people by solving their problems and making them physically stable.

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button