صحت مند غذا

مون سون کی خوراک میں یہ 5 سپر فوڈز شامل کریں، موسمی بیماریوں سے بچائیں گے۔

مون سون کا موسم اپنے ساتھ طرح طرح کی موسمی بیماریاں لے کر آتا ہے لیکن ان سپر فوڈز کو اپنی خوراک میں شامل کرکے آپ ان بیماریوں سے بچ سکتے ہیں۔

مون سون اپنے ساتھ کئی بیماریاں لے کر آتا ہے۔ مون سون کے دوران اسہال، پیٹ کی خرابی، فلو، کھانسی. بخار اور فنگل انفیکشن کا خطرہ نمایاں طور پر بڑھ جاتا ہے۔ اس موسم میں باہر کے کھانے سے پرہیز کریں. اور کوشش کریں کہ گھر میں پکا ہوا تازہ کھانا ہی کھائیں۔ مانسون میں صحت مند رہنے کے لیے آپ اپنی خوراک میں مکئی، انڈا، موسمی پھل اور ادرک شامل کر سکتے ہیں۔

مکئی کے بیج.(Corn seeds)

مون سون کے موسم میں مکئی کے دانے یا مکئی کے دانے بازار میں دستیاب ہوتے ہیں۔ یہ صحت کے لیے بہت فائدہ مند ہیں۔ مکئی میں فائبر پایا جاتا ہے جس سے قبض کا مسئلہ نہیں ہوتا۔ اس میں چکنائی نہیں ہوتی جس کی وجہ سے جب آپ اسے کھاتے ہیں تو آپ کو چکنائی کا ٹینشن نہیں ہوگا۔ اس میں وٹامن بی 1، بی 9 اور وٹامن سی پائے جاتے ہیں۔ اگر آپ مکئی کے دانے کو اپنی روزمرہ کی خوراک میں شامل کریں تو بینائی بھی بڑھ جاتی ہے۔ لیکن خیال رہے کہ شوگر کے مریض اس کا استعمال نہ کریں۔

یہ بھی پڑھیں- آلو کھانے کے بہت سے فوائد ہیں ، جانتے ہیں کہ آلو ہاضمے کے لیے کتنے فائدہ مند ہیں۔

monsoon-foods-to-include-in-your-diet-in-Urdu

انڈہ.(egg)

انڈے پروٹین سے بھرپور ہوتے ہیں۔ اگر اس کا باقاعدگی سے استعمال کیا جائے تو یہ ہماری قوت مدافعت میں اضافہ کرنے کے ساتھ ساتھ بیماریوں سے لڑنے میں بھی مددگار ثابت ہوتا ہے۔ انڈوں میں وٹامن اے، ڈی اور بی ون پایا جاتا ہے۔ انڈا ہماری ہڈیوں کو بھی مضبوط بناتا ہے۔

موسمی پھل.(seasonal fruit)

جامن، آلو بخارا، چیری، ناشپاتی اور سیب بارش کے موسم میں بازار میں دستیاب ہوتے ہیں۔ یہ تمام پھل ہمیں بیماریوں سے لڑنے کی طاقت دینے کے ساتھ ساتھ ہماری صحت کو بھی تندرست رکھتے ہیں۔ اس موسم میں تلے ہوئے کھانے سے پرہیز کرنا چاہیے۔ پھل آسانی سے ہضم ہوتے ہیں اور صحت کے لیے بھی بہت فائدہ مند ہیں۔ سیب فائبر سے بھرپور ہوتا ہے جو کہ ہمارے معدے کے لیے بہت اچھا ہے۔ ذیابیطس کے مریض بھی جامن آسانی سے کھا سکتے ہیں۔ اس میں کیلوریز بھی بہت کم ہوتی ہیں۔

جو.(barley)

پیٹ پھولنا اور بدہضمی جیسے مسائل میں ستّو کو بہت فائدہ مند سمجھا جاتا ہے۔ مون سون میں پیٹ کی بیماری بہت تکلیف دہ ہوتی ہے۔ ایسی حالت میں ستو کا باقاعدہ استعمال صحت کے لیے بہت اچھا ہو سکتا ہے۔ ست میں آئرن، پروٹین، کیلشیم اور کاربوہائیڈریٹس موجود ہوتے ہیں جو کہ صحت کے لیے بہت ضروری ہیں۔

یہ بھی پڑھیں- دماغ میں رسولی ہونے پر یہ 8 علامات جسم میں ظاہر ہوتی ہیں۔

monsoon-foods-to-include-in-your-diet-in-Urdu

ادرک.(Ginger)

ادرک ہماری قوت مدافعت کو بڑھاتی ہے جو کہ ہمیں مون سون میں ہونے والی ہماری موسمی بیماریوں سے بچاتی ہے۔ ادرک اینٹی آکسیڈنٹس سے بھرپور ہوتی ہے جو کہ سردی، گلے کی خراش اور کھانسی میں بہت فائدہ مند ہے۔ اسے چائے، کاڑھی اور سبزی بنانے کے لیے بھی استعمال کیا جا سکتا ہے۔

Aarif Rao

Arif Rao is a Herbalist, Blogger, Writer, YouTuber, and Digital Content Creator who is helping people by solving their problems and making them physically stable.

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button