دل کی صحت

سینے کے دائیں جانب کیوں درد ہوتا ہے؟ اس کی 5 وجوہات اور علاج کے طریقے جانیں۔

سینے کے دائیں جانب درد کی کئی وجوہات ہوسکتی ہیں، جانیے اس کی وجوہات اور علاج

اگر آپ کو سینے میں بائیں جانب درد ہو رہا ہے. تو اس کا تعلق ہارٹ اٹیک سے ہو سکتا ہے. لیکن اگر آپ کو سینے کے دائیں جانب درد ہو رہا ہے. تو اس کی بہت سی وجوہات ہو سکتی ہیں۔ ضروری نہیں کہ سینے کے دائیں جانب درد کی وجہ دل سے متعلق ہو یا یہ بذات خود ہارٹ اٹیک کی علامت ہو۔ بہت سی وجوہات ہیں جن کی وجہ سے سینے کے دائیں جانب درد پیدا ہوسکتا ہے جیسے چوٹ یا پیٹ سے متعلق مسئلہ وغیرہ۔ اس مضمون میں، ہم دائیں جانب سینے میں درد کی وجوہات اور علاج پر بات کریں گے۔

pain in right side of heart know causes in urdu

1. تناؤ یا افسردگی.(Stress or depression)

اگر آپ کسی چیز کو لے کر پریشان ہیں یا ڈپریشن کا شکار ہیں تو پھر بھی سینے کے دائیں جانب درد محسوس کیا جا سکتا ہے۔ اگر تناؤ کی وجہ سے سینے کے دائیں جانب درد ہو تو آپ کو دیگر علامات بھی نظر آ سکتی ہیں جیسے چکر آنا، پسینہ آنا، بے ہوشی، سانس پھولنا وغیرہ۔

2. ہاضمہ کا مسئلہ. (Digestive problem)

بدہضمی کی وجہ سے سینے کے دائیں جانب درد یا جلن کی شکایت ہوسکتی ہے۔ بدہضمی میں، آپ کو ایسا محسوس ہوسکتا ہے جیسے کھانا گلے یا سینے کے درمیان پھنس گیا ہو، اس کے علاوہ آپ کو گلے کے پچھلے حصے میں کھٹا ذائقہ ہوسکتا ہے، اگر آپ بدہضمی کی علامات کے بارے میں بات کریں تو آپ کو پھولنا، پیٹ میں درد محسوس ہوسکتا ہے۔ پیٹ کا اوپری حصہ، کھانا اس کے بعد آپ کو بےچینی وغیرہ محسوس ہوسکتی ہے۔ بدہضمی کی وجہ سے آپ گلے میں جلن بھی محسوس کر سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: اگر آپ دل کے امراض سے بچنا چاہتے ہیں تو ابھی سے وزن کم کرنا شروع کر دیں،

3. سینے کی چوٹ.(Chest injury)

یہاں تک کہ اگر سینے میں کوئی بیرونی یا اندرونی چوٹ ہو تو آپ کو سینے کے دائیں جانب درد محسوس ہوسکتا ہے۔ pectoralis کے مسلز کے پہننے کی وجہ سے بھی سینے میں درد محسوس ہوتا ہے۔ اگر آپ کو سانس لینے میں دشواری ہو رہی ہو، یا اپنے سینے کے پہلو میں سوجن محسوس ہو رہی ہو تو آپ کو ڈاکٹر سے ملنا چاہیے، یہ چوٹ کی علامات ہو سکتی ہیں۔

4. ایسڈ ریفلکس.(Acid reflux)

اگر ایسڈ ریفلکس کا مسئلہ ہو تو بھی دل کے دائیں جانب درد ہوتا ہے۔ ایسڈ ریفلکس اس وقت ہوتا ہے جب معدے میں موجود تیزاب فوڈ پائپ یا ونڈ پائپ کی طرف بڑھتا ہے۔ ایسڈ ریفلکس کی علامات کے بارے میں بات کرتے ہوئے، پیٹ میں درد، منہ میں کھٹا ذائقہ، سینے میں جلن وغیرہ جیسے مسائل ہوسکتے ہیں۔

5. لیگامینٹس میں تناؤ. (Stress in ligaments)

پٹھوں میں بہت زیادہ تناؤ کی وجہ سے سینے کے دائیں جانب درد کا مسئلہ ہوسکتا ہے۔ یہ کسی صدمے کی وجہ سے بھی ہوسکتا ہے یا اس طرح کا مسئلہ کھلاڑیوں میں کھیلتے ہوئے نظر آتا ہے، جو لوگ زیادہ ورزش کرتے ہیں، ان میں بھی ایسا مسئلہ دیکھنے میں آتا ہے۔ پٹھوں پر دباؤ کی وجہ سے سینے کے دائیں جانب درد ہوسکتا ہے، ایسا ہونے پر آئس پیک لگائیں یا ڈاکٹر سے دوا لیں اور کچھ دیر کے لیے بھاری کام سے گریز کریں۔

گر آپ کو دل کے دائیں جانب درد ہے تو یہ طریقہ آزمائیں. (Treatment to cure pain in right side of heart)

دل کے دائیں جانب درد کے لیے ہلدی کا دودھ.(Turmeric milk)

دل کے دائیں جانب درد کئی وجوہات کی وجہ سے ہوسکتا ہے، ہوسکتا ہے کہ پٹھے کھنچ گئے ہوں یا کوئی چوٹ لگ جائے۔ درد سے نجات کے لیے ہلدی والا دودھ لیں۔ ہلدی میں سوزش کی خصوصیات ہوتی ہیں جو درد کو دور کرتی ہیں۔ آپ ہلدی والا دودھ کسی بھی وقت کھا سکتے ہیں۔ ہلدی میں پایا جانے والا کرکیومین سینے کی سوزش یا جلن کو بھی دور کرتا ہے۔

pain in right side of heart know causes in urdu

اجوائن نمک دل کے دائیں جانب کے درد کو دور کرتا ہے۔ (Ajwain and salt)

دل کے دائیں جانب درد کی وجہ پیٹ میں درد، قبض کا مسئلہ، پیٹ میں درد یا گیس کا مسئلہ بھی ہوسکتا ہے، جس پر قابو پانے کے لیے آپ کو اجوائن نمک کا استعمال کرنا چاہیے۔ اس کے استعمال کے لیے اجوائن کو توے پر بھونیں، اس پر نمک چھڑکیں اور چبائے بغیر کھائیں اور پانی پی لیں۔ اس سے درد دور ہو جائے گا۔

سینے کے دائیں جانب یا اس کے گرد درد کو دور کرنے کے لیے تلسی.(Tulsi)

دل کے دائیں جانب ہونے والے درد سے نجات کے لیے آپ تلسی لے سکتے ہیں۔ تلسی کے پتوں میں وٹامن K اور میگنیشیم پایا جاتا ہے۔ میگنیشیم دل کے گرد درد سے نجات دلائے گا۔ تلسی کے پتوں میں موجود رس نکالنے کے بعد اسے شہد میں ملا کر پی سکتے ہیں یا تلسی کے 8 سے 10 پتوں کا استعمال بھی درد سے نجات دلاتا ہے۔

دل کے دائیں جانب درد کی صورت میں ادرک لہسن لیں۔(Ginger-Garlic) 

ادرک کا استعمال دل اور پیٹ سے متعلق مسائل کو دور کرنے میں فائدہ مند ہے۔ اگر کولیسٹرول بڑھنے کی وجہ سے درد ہو رہا ہو تو ادرک کی چائے پی سکتے ہیں یا کچی ادرک کھا سکتے ہیں، لہسن کے استعمال سے کولیسٹرول بھی کنٹرول میں رہتا ہے، لہسن کا رس گرم کر کے پی سکتے ہیں۔

سینے کے دائیں جانب کے درد کو دور کرنے کے لیے ایلو ویرا.(Aloevera)

ایلوویرا کا جوس پینے سے سینے یا گردونواح میں درد سے بھی آرام ملتا ہے۔ آپ کو روزانہ ایک چوتھائی کپ ایلو ویرا کا جوس پینا چاہیے۔ ایلوویرا کا جوس پینے کے بہت سے فائدے ہیں، اسے پینے سے کولیسٹرول کنٹرول میں رہتا ہے، ہائی بی پی کا مسئلہ نہیں ہوتا، یہ بلڈ پریشر کو کم کرنے میں مدد دیتا ہے اور سینے کے درد میں آرام آتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: جگر کی خرابی: جگر کی خرابی کیوں ہوتی ہے اور اس کی علامات کیا ہیں؟ 

اگر آپ کو یہ علامات نظر آئیں تو ہوشیار رہیں.(Serious symptoms)

اگر سینے کے دائیں جانب درد ہو تو اس کی اور بھی وجوہات ہوسکتی ہیں جن سے بچنے کے لیے آپ کو ورزش اور خوراک کا صحیح توازن رکھنا چاہیے۔ اگرچہ سینے کے دائیں جانب درد ہونا کوئی مسئلہ نہیں ہے لیکن اگر یہ علامات نظر آئیں تو فوراً ڈاکٹر کو دکھائیں۔

  • اچانک پسینہ آنا۔
  • کمزوری محسوس کرنا
  • چکر آنا یا قے آنا۔
  • سانس لینے میں دشواری
  • سینے میں مضبوط دباؤ کا احساس۔
  • ناقابل برداشت درد
  • گردن، پیٹ، کمر وغیرہ میں شدید درد۔

ضروری نہیں کہ سینے کے دائیں جانب درد دل کے دورے کی علامت ہو، درد چوٹ یا پیٹ سے متعلق کسی مسئلے کی وجہ سے بھی ہو سکتا ہے، تاہم شدید درد کو نظر انداز نہ کریں، ڈاکٹر سے رجوع کریں اور ضروری ٹیسٹ کروائیں۔

 

Aarif Rao

Arif Rao is a Herbalist, Blogger, Writer, YouTuber, and Digital Content Creator who is helping people by solving their problems and making them physically stable.

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button