صحت کا دیسی علاج

ان 5 حالات میں آپ چنے اور سوجی کھانے سے گریز کریں، صحت کو بہت سے نقصانات ہو سکتے ہیں۔

کیا آپ کو چنے اور سوجی سے بنی چیزیں کھانے کے بعد سینے میں جلن ہوتی ہے؟ ایسی صورتحال میں آپ کو چنے اور سوجی کھانے سے گریز کرنا چاہیے۔

حلوہ، مرچ، پکوڑے اور ڈھوکلا مختلف قسم کے پکوان ہیں. جو چنے کے آٹے اور سوجی سے بنائے جاتے ہیں۔ بعض اوقات ہم ان کے بغیر اپنی پسندیدہ مسالیدار چیزوں کا تصور بھی نہیں کر سکتے۔ لیکن کیا سوجی اور چنے کے آٹے کا استعمال ہر حال میں اور ہر وقت فائدہ مند ہے؟ درحقیقت کچھ لوگوں کو چنے اور سوجی کھانے کے بعد پیٹ پھولنا، تیزابیت اور بدہضمی کی شکایت بھی ہوتی ہے۔ اس کے علاوہ جن لوگوں کو ان سے الرجی ہوتی ہے .وہ بھی کچھ دوسری علامات کی شکایت کرتے ہیں۔ درحقیقت یہ چنے اور سوجی کھانے کے وہ نقصانات ہیں جنہیں ہم اکثر نہیں پہچان پاتے۔ دراصل، ایسا ہوتا ہے .کہ چنے کا آٹا اور سوجی دونوں فائبر اور پروٹین سے بھرپور ہوتے ہیں۔ جب ہم انہیں زیادہ مقدار میں لیتے ہیں تو یہ ہمارے میٹابولزم پر اثر انداز ہوتا ہے. اور انہیں عام چیزوں سے ہضم ہونے میں زیادہ وقت لگتا ہے۔ اس لیے آج ہم آپ کو ایسی 5 صورتوں کے بارے میں بتائیں گے جن میں آپ کو چنے اور سوجی کھانے سے گریز کرنا چاہیے۔

when we should not have gram suji in our diet in urdu

چنے اور سوجی کا استعمال کب نہ کیا جائے- When not to consume gram flour and semolina

1. قبض ہونے پر.  On being constipated

ہم میں سے اکثر لوگ قبض کے مسئلے سے پریشان ہیں. اور چنے اور سوجی کا استعمال اس مسئلے کو مزید بڑھا سکتا ہے۔ درحقیقت چنے کا آٹا فائبر کا ایک اچھا ذریعہ ہے. اور اگر فائبر کا زیادہ استعمال کیا جائے تو یہ معدے کے لیے نقصان دہ ہوسکتا ہے.کیونکہ یہ قبض کا باعث بن سکتا ہے۔ ہوتا یہ ہے کہ چنے کا آٹا ایک اینٹی غذائیت ہے .اور جسم میں دیگر غذائی اجزاء کے جذب کو نقصان پہنچاتا ہے۔ اس کے ساتھ کافی مقدار میں پانی نہ پینے سے جسم میں پانی کی کمی پیدا ہوجاتی ہے .جس کی وجہ سے پاخانہ خشک ہوجاتا ہے اور قبض کا مسئلہ بھی ہوتا ہے۔ سوجی کا بھی یہی حال ہے۔ سوجی پانی کو جذب کرنا شروع کر دیتی ہے. اور جب آپ اسے زیادہ کھاتے ہیں تو یہ نظام انہضام کو پابند کرنے لگتا ہے. اور قبض کا مسئلہ ہوتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: کون سی سبزیاں کھائیں اور کون سی سبزیاں سے پرہیز کیا جائے گردے میں پتھری نہ ہو؟

2. تیزابیت اور اپھارہ میں. In acidity and bloating

when we should not have gram suji in our diet in urdu

چنے کا آٹا اور سوجی کھانے کے بعد بہت سے لوگوں کو تیزابیت اور اپھارہ کا مسئلہ ہوتا ہے۔ جی ہاں جب آپ چنے کے آٹے اور سوجی سے بنی بہت سی چیزیں کھاتے ہیں تو سب سے پہلے یہ میٹابولزم کو سست کرتا ہے اور پیٹ کو دیر تک بھرا رکھتا ہے۔ اس کے علاوہ چنے اور سوجی سے بنی چیزیں کھانے کے بعد پانی پینے کی زیادہ ضرورت ہوتی ہے اور جب ہم ایسا نہیں کرتے اور ایک کے بعد ایک چیزیں کھاتے ہیں تو تیزابیت اور اپھارہ کا مسئلہ ہو جاتا ہے۔

3. خالی پیٹ. Empty Stomach

چنے کے آٹے اور سوجی کا خالی پیٹ استعمال کئی طرح سے فائدہ مند نہیں ہے۔ دراصل، پہلے یہ پیٹ کے پی ایچ اور استر کو پریشان کرتا ہے۔ دوسرا میٹابولزم کو سست کرتا ہے اور دن بھر کی بھوک کو دباتا ہے۔ اس کے علاوہ، صبح کے وقت ان کے فائبر اور پروٹین کو زیادہ مقدار میں استعمال کرنے سے انسان کو سستی محسوس ہوتی ہے. اور دن بھر سستی محسوس ہوتی ہے۔ اس لیے صبح سویرے خالی پیٹ چنے اور سوجی سے بنی چیزوں کے بجائے راگی اور جئی سے بنی چیزیں کھانے کو ترجیح دیں۔ اس کے علاوہ آپ اپنے ناشتے میں سیریلز، اسموتھیز اور دلیا وغیرہ بھی شامل کر سکتے ہیں۔

4. کم بلڈ شوگر والے لوگ.People with low blood sugar

سوجی فائبر سے بھرپور ہوتی ہے. جو کہ خون کو کنٹرول کرنے کے لیے ضروری غذائیت ہے۔ فائبر آپ کے خون میں کاربوہائیڈریٹ کے جذب کو سست کرتا ہے .اور کھانے کے بعد بلڈ شوگر کی بڑھتی ہوئی مقدار کو کنٹرول کرنے میں مدد کرتا ہے۔ اسی طرح چنے کا آٹا ذیابیطس کے مریضوں کے لیے بھی فائدہ مند ہے کیونکہ اس میں فائبر بھی ہوتا ہے. جو خون میں شوگر کو متوازن رکھنے میں مددگار ہوتا ہے۔ لیکن جن لوگوں کو بلڈ شوگر کم ہونے کا مسئلہ ہے.اس کا باقاعدگی سے استعمال جسم میں دیگر کئی مسائل کو جنم دے سکتا ہے۔ جیسے چکر آنا، طاقت کی کمی اور کام کرنے میں دشواری وغیرہ۔

یہ بھی پڑھیں: سردیوں میں کون سا پھل کھائیں: سردیوں میں یہ 8 پھل کھائیں، بہت سے مسائل دور رہیں گے۔

5. الرجی ہونا. Having Allergies

اگر آپ کو گندم سے الرجی ہے تو آپ کو سوجی سے بنی یا بنی کوئی چیز نہیں کھانی چاہیے۔ آپ کو چھتے، ناک بہنا، چھینک آنا، پیٹ میں درد، متلی، الٹی یا دمہ جیسی علامات کا سامنا ہو سکتا ہے۔ اسی طرح، گلوٹین کی حساسیت اور سیلیک بیماری کے ساتھ سوجی کا استعمال پیٹ میں درد، دائمی اسہال، اپھارہ یا قبض کا سبب بن سکتا ہے۔ اس کے ساتھ ساتھ کچھ لوگوں کو چنے کے آٹے سے الرجی ہوتی ہے. جس میں کھانے کے بعد جلد پر خارش اور چھتے وغیرہ کا مسئلہ ہوتا ہے۔

اس طرح آپ کو ان حالات میں چنے کے آٹے اور سوجی سے بنے پکوان کھانے سے گریز کرنا چاہیے۔ اس کے علاوہ آج کل بازار میں چنے کے آٹے اور سوجی کی ملاوٹ بڑھ گئی ہے جس کی وجہ سے انہیں کھانے کے بعد صحت سے متعلق کئی مسائل پیدا ہونے لگتے ہیں۔

Aarif Rao

Arif Rao is a Herbalist, Blogger, Writer, YouTuber, and Digital Content Creator who is helping people by solving their problems and making them physically stable.

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button