صحت مند غذا

ان 6 طریقوں سے انگور کا استعمال صحت کے لیے نقصان دہ ہو سکتا ہے۔

انگور کا زیادہ استعمال حمل کے دوران مسائل پیدا کر سکتا ہے، وزن بڑھنا اور اس طرح کے بہت سے مسائل دیکھے جا سکتے ہیں۔

بچے ہوں یا بڑے انگور، ہر کوئی کھانا پسند کرتا ہے۔ انگور وٹامنز، منرلز اور اینٹی آکسیڈنٹس سے بھرپور ہوتے ہیں۔ اس لیے انہیں کھانے کے کچھ صحت کے فائدے بھی ہیں۔ لیکن آج ہم ان کی وجہ سے ہونے والے نقصانات کے بارے میں بات کر رہے ہیں۔ اگر آپ انگور کا زیادہ استعمال کرتے ہیں تو اس کے بہت سے مضر اثرات بھی ہوتے ہیں۔100 گرام انگور میں تقریباً 70 کیلوریز، 1 گرام پروٹین، آدھے گرام سے کم چکنائی، ایک گرام سے زیادہ فائبر، روزانہ کی ضرورت کا 20 فیصد ہوتا ہے۔ کاپر اور 17% وٹامن K۔ 7% تھامین پر مشتمل ہے۔ ان کا زیادہ استعمال وزن میں اضافے کا سبب بن سکتا ہے۔ یہی نہیں انگور کے زیادہ استعمال سے معدے سے متعلق مسائل بھی پیدا ہوسکتے ہیں اس لیے انگور کا استعمال محدود مقدار میں کرنا چاہیے۔ تو آئیے جانتے ہیں کہ انگور کا زیادہ استعمال آپ کے لیے کس طرح نقصان دہ ہو سکتا ہے۔

why we should limit grapes intake in urdu

1. انگور اسہال کا سبب بن سکتے ہیں۔(Grapes Can Cause Diarrhea)

وہ چیزیں جو بہت زیادہ میٹھی ہیں اسہال کا سبب بن سکتی ہیں۔ ایسی چیزیں جن میں شوگر الکحل ہوتی ہے اسہال کا سبب بن سکتی ہے۔ لیکن اس بات کا کافی ثبوت نہیں ہے کہ انگور میں شوگر الکوحل ہوتے ہیں۔ انگور میں موجود سادہ چینی کی وجہ سے یہ اسہال کا باعث بھی بن سکتی ہے، اس لیے اگر پہلے سے ہی معدہ خراب ہو تو اس کا زیادہ استعمال نہیں کرنا چاہیے۔

یہ بھی پڑھیں: گھر پر منرل واٹر تیار کریں اور صحت کے کچھ خاص فوائد حاصل کریں۔

2. پیٹ خراب ہو سکتا ہے۔ (Stomach Can Get Upset)

انگور میں سیلیسیلک ایسڈ ہوتا ہے۔ اگر اس کا زیادہ استعمال کیا جائے تو سوزش، پیٹ میں درد، اسہال اور اپھارہ جیسے مسائل دیکھنے کو ملتے ہیں۔ انگور کا زیادہ استعمال اپینڈیسائٹس جیسے مسائل کا باعث بھی بن سکتا ہے۔ اگر انگور ٹھیک سے ہضم نہ ہوں تو پیٹ میں درد ہو سکتا ہے۔

3. انگور گردے سے متعلق مسائل پیدا کر سکتے ہیں۔(Grapes Can Cause Kidney Related Problems)

ماہرین کے مطابق اگر گردے کی پرانی بیماری ہو یا شوگر کا مسئلہ ہو تو انگور کا استعمال نہیں کرنا چاہیے۔ تاہم، یہاں تک کہ اگر آپ پہلے سے کچھ ادویات لے رہے ہیں، انگور کے استعمال سے گریز کرنا چاہئے کیونکہ بعض اوقات دوائیوں کے ساتھ انگور کا الٹا اثر ہوتا ہے۔

why we should limit grapes intake in urdu

4. انگور حمل کی پیچیدگیاں پیدا کر سکتے ہیں۔(Grapes Can Create Pregnancy Complications)

انگور میں مضبوط پولی فینول ہوتے ہیں جو ریڈ وائن میں بھی پائے جاتے ہیں۔ ان کی وجہ سے بچے میں لبلبے کے مسائل دیکھے جا سکتے ہیں۔ اس لیے اپنی اور بچے کی حفاظت کو برقرار رکھنے کے لیے انگور کھاتے وقت احتیاط برتیں۔

یہ بھی پڑھیں: کالے انگور کے فائدے: کالے انگور کھانا ذیابیطس میں فائدہ مند ہے، اس کی 5 وجوہات جانیں۔

5. انگور الرجی کی وجہ بن سکتے ہیں۔(Grapes Can Be The Cause Of Allergy)

بہت کم لوگوں کو انگور سے الرجی ہوتی ہے۔ لیکن اس سے جڑی الرجی کافی خطرناک ہو سکتی ہے۔ اس میں مائع پروٹین ٹرانسفراسز موجود ہوتے ہیں اور یہی چیز الرجی کا سبب بنتی ہے۔ اس کی الرجی کی علامات میں خارش، خارش اور منہ کی سوجن شامل ہیں۔ یہ الرجی خطرناک ہیں لیکن ان کا علاج کیا جا سکتا ہے۔

انگور کو محدود مقدار میں استعمال کرنا چاہیے خاص طور پر جب آپ گردے یا ذیابیطس کے مریض ہوں۔ انگوروں کو بھی چھیلنا چاہیے کیونکہ چھلے ہوئے انگور 6 سے 12 ماہ کے بچوں میں گلے کی سوزش کا باعث بن سکتے ہیں۔

Aarif Rao

Arif Rao is a Herbalist, Blogger, Writer, YouTuber, and Digital Content Creator who is helping people by solving their problems and making them physically stable.

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button